Til (Sesame Seeds) - Safed Til Ke Fayde

تل - sesame seeds benefits in Urdu - sehat ke liye anmool safed til ke fayde

Til (Sesame Seeds) - Safed Til Ke Fayde

تل ایک چھوٹا بیج ہے جو تیل سے بھرپور ہوتا ہے۔ تل سیسیمم انڈیکم نامی پودے پر پھلیوں میں پیدا ہوتے ہیں۔ صحت کے اعتبار سے تل کے بے شمار فوائد ہیں۔ اس کے علاوہ یہ ہزاروں صدیوں سے ادویات میں استعمال ہو رہے ہیں۔ تل دو رنگ کے ہوتے ہیں، سفید اور سیاہ۔ تل کا شمار بہترین نباتی لحمیات (پروٹین) میں ہوتا ہے۔ تل میں نباتی تیل کےعلاوہ لیسی تھین (یہ ایک فاسفورس آمیز چکنائی ہے جو دماغ اور اعصاب کی صحت کے لیے بہت ضروری ہوتی ہے) بھی خوب ہوتا ہے۔ آج بھی پہلوان طاقت میں اضافے کیلیے اسے استعمال کرتے ہیں۔

safed til ke fayde

تل کے فائدے

؎

تل ذیابیطس، دل کی بیماری، اور گٹھیا کی بیماری کیلیے بہت مفید ہوتے ہیں۔

؎

جاڑوں میں پیشاب کے بار بار آنے کے لیے اس کا استعمال مفید ثابت ہوتا ہے۔ جو بچے بستر میں پیشاب کر دیتے ہیں، انہیں بھی اس کے لڈو کھلانے سے بہت فائدہ ہوتا ہے۔ تل کھانے سے قطرہ قطرہ پیشاب آنے کی شکایت بھی دورہوجاتی ہے۔

؎

عمدہ قسم کے تل صاف کر کے ہلکی آنچ پربھون لیجۓ اور اس میں شکر یا گڑ ملا کرخوب چبا کر دو سے چار چاۓ کے چمچے کھا کر دودھ پی لیجۓ۔ چند ہی روز میں آپ خود ہی اس کے فائدوں کے قائل ہو جائیں گے۔

؎

تل کو سرکہ میں پیس کر چہرے پر لیپ کرنے سے مہاسے دور ہو جاتے ہیں۔

؎

تلوں کو پیس کر بالوں کی جڑوں میں لگانے سے بالوں کی جڑیں مضبوط ہوتی ہیں اورخوب بڑھتے، کالے، اور چمکیلے ہو جاتے ہیں۔

؎

تل کے پتوں کو پیس کر سر میں لگانے سے سر کی بوسی (بفا) دور ہو جاتی ہے۔

؎ 

ناگ پھنی ایک کانٹوں دار پودا ہے۔ اس کے کانٹے نہایت باریک اور سفید رنگ کے ہوتے ہیں۔ اگر اتفاق سے کسی آدمی کے جسم میں چبھ جاتے ہیں تو بہت تکلیف دیتے ہیں، ان کا نکلنا بہت مشکل ہوتا ہے۔ ان کے لیے تلوں کا تیل بہت مفید دوا ہے۔ جسم میں جہاں کانٹے چھبھیں، تلوں کا تیل برابر لگاتے رہیں۔ ایسا کرنے سے کانٹے گل کرخارج ہو جائیں گے۔

؎

بدن کو موٹا کرتے ہیں۔

؎

تیس گرام تل کے بیجوں میں 3.5 گرام فائبر موجود ہوتا ہے۔  تل جسم میں فائبر کی مقدار کو بڑھانے میں مدد فراہم کرتا ہے۔ چونکہ فائبر ہاضمہ صحت کیلیے ایک اہم کردار ادا کرتا ہے لہذا تل باقاعدگی کیساتھ کھانے سے فائبر کی کمی پر قابو پایا جا سکتا ہے۔

white sesame seeds benefits in urdu

؎

تل کولیسٹرول کو کم کرنے میں مدد کرتا ہے۔

؎

سوزش کو کم کرتا ہے۔

؎

تل بلڈ پریشر کو کم کرنے میں مدد کرتا ہے (تل میں میگنیشیم کی مقدار زیادہ ہوتی ہے جو ہائی بلڈ پریشر کو کم کرنے پر قدرت رکھتا ہے)۔

Read in Roman Urdu / Roman Hindi

Til aik chhota beej hai jo tail se bharpoor hota hai. Til sesamum indicum nami poday par phalion mein peda hotay hain. Sehat ke aitbaar se til ke be shumaar fawaid hain. Es ke ilawa yeh hazaron sadiyon se adwiyaat mein istemaal ho rahay hain. Til do rang ke hotay hain, safed aur siyah. Til ka shumaar behtareen nabatati lahmiaat (protein) mein hota hai. Til mein tail ke ilawa lecithin (yeh aik phosphorus amaiz chiknai hai jo dimagh aur asaab ki sehat ke liye bohat zaroori hoti hai ) bhi khoob hota hai. Aj bhi pehelvaan taaqat mein izafay ke liye til ka istemaal karte hain.

TIL KE FAIDAY

1. Til diabities, dil ki bemari, aur gathiya ki bimari ke liye bohat mufeed hotay hain.
2. Jarhon mein pishaab ke baar baar anay ke liye is ka istemaal mufeed saabit hota hai. Jo bachay bistar mein pishaab kar dete hain, inhen bhi til ke laddu khilanay se bohat faida hota hai. Til khanay se qatra qatra pishaab anay ki bemari bhi dour ho jati ha.
3. Umdah qisam ke til saaf kar ke halki aanch par bhoon lejiay aur is mein shukar ya gur mila kar hoob chaba kar do se chaar chai ke chamchay kha kar doodh pi lejiay. Chand hi roz mein aap khud hi is ke faido ke qaail ho jayen ge.
4. Til ko sirka mein pees kar chehray par laip karne se mahasay daur ho jatay hain.
5. Tilon ko pees kar balon ki jaroon mein laganay se balon ki jarrain mazboot hoti hain aor baal khoob barhatay, kalay, aur chamkile ho jatay hain.
6. Til ke patoun ko pees kar sir mein laganay se sir ki bosi (bafa) daur ho jati hai .
7. Nagphani aik kaanton daar poda hai. Es ke kantay nihayat bareek aur safed rang ke hotay hain. Agar itafaq se kisi aadmi ke jism mein chubh jatay hain to bohat takleef dete hain, En ka niklana bohat mushkil hota hai. Un ke liye tilon ka tail bohat mufeed dawa hai. Jism ma jahan kantay chubain, tilon ka tail barabar lagatay rahen. Aisa karne se kantay Gal kar kharij ho jayen ge.
8. Badan ko mota karte hain.
9. 30 gram til ke beejon mein 3.5 gram fiber mojood hota hai. Til jism mein fiber ki miqdaar ko badhaane mein madad faraham karta hai. Chunkay fiber haazma-e-sehat ke liye aik ahem kirdaar ada karta hai lehaza til baqaidagi kay sath khanay se fiber ki kami par qaboo paaya ja sakta hai.
10. Til cholesterol ko kam karne mein madad karta hai.
11. Soozish ko kam karta hai.
12. Til blood pressure ko kam karne mein madad karta hai (til mein magnessium ki miqdaar ziyada hoti hai jo high blood pressure ko kam karne par qudrat rakhta hai).